پاکستان ویٹرنری میڈیکل کونسل کی کارکردگی کاجائزہ لینے کے لیے میٹنگ کاانعقاد

تاریخ: 6ستمبر 2013

میٹنگ کاانعقاد
میٹنگ کاانعقاد

پاکستان ویٹرنری میڈیکل کونسل کی کارکردگی کاجائزہ لینے کے لیے سول سیکرٹریٹ لاہورمیں ایک میٹنگ کاانعقادہواجس کی بریفنگ مہمان خصوصی ڈاکٹرساجدیوسفانی سیکرٹری لائیوسٹاک پنجاب نے لی۔ میٹنگ میں ڈاکٹرافتخارعلی ڈپٹی سیکرٹری (ٹیکنیکل)، ڈاکٹرمحمدنوازسعیدڈائریکٹرجنرل (توسیع)، پروفیسرڈاکٹرطلعت نصیرپاشاوائس چانسلرویونیورسٹی آف ویٹرنری اینڈاینیمل سائنسز لاہور، ڈاکٹرمحمدارشدصدرپاکستان ویٹرنری میڈیکل کونسل، ڈاکٹراسرارحسین ڈائریکٹرکمیونیکیشن اینڈ ایکسٹینشن ، پروفیسرمسعودربانی یونیورسٹی آف ویٹرنری اینڈاینیمل سائنسز لاہور،جنرل سیکرٹری پاکستان ویٹرنری میڈیکل کونسل اوردیگرایگزیکٹوباڈی کے ممبران نے شرکت کی۔ اس موقع پر ڈاکٹرمحمدارشدصدرپاکستان ویٹرنری میڈیکل کونسل نے ڈاکٹرساجدیوسفانی سیکرٹری لائیوسٹاک پنجاب کوبریفنگ دیتے ہوئے کہاکہ پاکستان ویٹرنری میڈیکل کونسل 1996ایکٹ کے تحت 1999میں رجسٹر ہوئی ۔ 19ممبران پرمشتمل اس کی ایگزیکٹوباڈی کو4سال کے لیے منتخب کیاجاتاہے۔ پاکستان ویٹرنری میڈیکل کونسل کے تحت 7مختلف نوعیت کی کمیٹیاں کام کررہی ہیں جن میں ویٹرنری اداروں کی ایکریڈیٹیشن، ویٹرنری اورپیراویٹرنری کورسز کے سلیبس کی سٹینڈرڈائزیشن، ویٹرنری ادویات کی لائسنسنگ اوررجسٹریشن کے بارے سفارشات مرتب کرنے کے علاوہ میڈیاکمیٹی اوردیگرریگولیشن کمیٹیاں شامل ہیں۔

انہوں نے بتایاکہ اس وقت پاکستان میں 13ویٹرنری یونیورسٹیاں اورکالجز ہیں جن میں سے 9کی رجسٹریشن ہوچکی ہے جبکہ 4یونیورسٹیوں اورکالجز کی رجسٹریشن تاحال نہیں ہوئی۔ انہوں نے بتایاکہ اب تک 7ہزار964ویٹرنری /اینیمل ہسبنڈری گریجوایٹس رجسٹر ہوچکے ہیں۔ پاکستان کے ویٹرنری اداروں میں2009تا2013کے دوران 5ہزار226انڈرگریجوایٹس اور357پوسٹ گریجوایٹس طلباء وطالبات زیرِتعلیم ہیں۔ میٹنگ میں ڈاکٹرساجدیوسفانی سیکرٹری لائیوسٹاک پنجاب نے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ وہ4ویٹرنری تعلیمی ادارے جوابھی تک پاکستان ویٹرنری میڈیکل کونسل سے رجسٹرڈ نہیں ہیں ان کی رجسٹریشن کرواناانتہائی ضروری ہے۔

اس ضمن میں انہوں نے ڈاکٹرافتخارعلی ڈپٹی سیکرٹری( ٹیکنیکل) کی سربراہی میں ایک کمیٹی تشکیل دی جوکہ مذکورہ ویٹرنری تعلیمی اداروں کی رجسٹریشن میں حائل رکاوٹوں کی نشاندہی کرے گی تاکہ حکومت پنجاب مالی اورتکنیکی معاونت فراہم کرتے ہوئے پاکستان ویٹرنری میڈیکل کونسل کوتمام ترمعیاری سہولیات فراہم کرسکے۔ انہوں نے کہاکہ محکمہ لائیوسٹاک اینڈڈیری ڈویلپمنٹ ان 4اداروں میں فیکلٹی ممبران کو پوراکرنے کے لیے ڈیپوٹیشن پرویٹرنری ڈاکٹرز/ماہرین بھی بھیجنے کے لیے تیارہے۔

سیکرٹری لائیوسٹاک پنجاب نے مزید کہاکہ پاکستان ویٹرنری میڈیکل کونسل لائیوسٹاک سیکٹرمیں ہیومن ریسورس (ویٹس/پیراویٹس)کودرپیش مسائل اوران کے حل کے لیے تجاویزپریزنٹیشن کی صورت میں رواں ماہ کے اختتام تک حکومت پنجاب کو پیش کرے تاکہ لائیوسٹاک سیکٹرکوتجربہ کاراورقابل پروفیشنلز فراہم کئے جاسکیں۔

Copy Rights @ ZaraiMedia.com.

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More