حکومت صنعت اور تاجر دوست ہے اور مستقبل میں بیرونی سرمایہ کاری سمیت صنعتی شعبے کی ترقی و ترویج کے منصوبے شروع کرنا چاہتی ہے

refund-claimed-exportersفیصل آباد( )صدر فیصل آباد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری میاں زاہد اسلم نے کہا ہے کہ ن لیگ کی حکومت صنعت اور تاجر دوست ہے اور مستقبل میں بیرونی سرمایہ کاری سمیت صنعتی شعبے کی ترقی و ترویج کے منصوبے شروع کرنا چاہتی ہے اس ضمن میں ضروری ہے کہ برآمدکنندگان کی مالی مشکلات کو بھی پیش نظر رکھتے ہوئے فوری طور پر ریفنڈ کلیمز کا اجراء عمل میں لایا جائے تاکہ وہ برآمدی آرڈرز کی بروقت تکمیل اور ترسیل کرسکیں جس سے نہ صرف ملک کو کثیر غیر ملکی زرمبادلہ کا حصول ممکن ہوسکے گا بلکہ صنعتی ورکرز کیلئے روزگار کے بھی خاطر خواہ مواقع میسر ہوسکیں گے۔

انہوں نے کہا کہ صنعتی شعبہ توانائی بحران ودیگر جملہ مسائل کی وجہ سے زبوں حالی کا شکار ہے اور نہ صرف اسکی پیداواری صلاحیت کم ہوچکی ہے بلکہ برآمدات میں بھی خاصی کمی ہوچکی ہے اور صنعتیں دیگر ممالک منتقل ہورہی ہیں۔اسی طرح گزشتہ کئی سالوں سے برآمدکنندگان اربوں روپے کے ڈیوٹی ڈرا بیک،سیلز ٹیکس اور ریسرچ اینڈ ڈویلپمنٹ کے ریفنڈ کلیمز زیرالتواء ہونے کی وجہ سے شدید مالی بحران کا شکار ہوچکے ہیں۔انہوں نے مزید کہا کہ گزشتہ حکومت کی کرپشن،بدانتظامی اور معیشت کی بدحالی کے کارناموں سے ہر کوئی باخوبی واقف ہے اور ن لیگ کی موجودہ حکومت سے عوام بالخصوص بزنس کمیونٹی میں بڑی امیدیں پائی جارہی ہیں چنانچہ حکومت کو عملی طور پر اس تااثر کی واضح پاسداری کرتے ہوئے تاجر و صنعتکاروں کو ریلیف فراہم کرنا ہوگا جس کا بالواسطہ طور پر فائدہ اصل میں عوام کو ہی ہوگا۔انہوں نے کہا کہ حکومت نے ایک پروفیشنل بجٹ تو دیا ہے مگر تاحال برآمدکنندگان کے اربوں روپے کے ڈیوٹی ڈرا بیک،سیلز ٹیکس اور ریسرچ اینڈ ڈویلپمنٹ کے ریفنڈ کلیمز زیرالتواء ہیں جس کیلئے فوری طور پر فیصلہ کن پالیسی وضح کرنی کی اشد ضرورت ہے تاکہ وہ برآمدکنندگان اپنے آرڈرز کی بروقت تکمیل کرسکیں۔

Copy Rights @ www.zaraimedia.com

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More