جڑی بوٹیاں کھاد اور پانی کو ضائع کر تی ہیں :ایوب تحقیقاتی ادارہ

جمعـء 19 جولائ 2013

80فیصد کسان جڑی بوٹیوں کی تلفی کیلئے اقدامات نہیں کرتے ، پیداوار میں کمی ہوتی ہے

فیصل آباد:  ایوب زرعی تحقیقاتی ادارہ فیصل آباد کے ماہرین نے کہا ہے کہ جڑی بوٹیاں نہ صرف فصلوں کو دی جانے والی کھاد اور پانی کی کافی مقدار ضائع کر دیتی ہیں بلکہ فصلوں کے کیڑوں کو تحفظ بھی فراہم کرتی ہیں جو بھاری نقصان کا سبب بنتا ہے ۔

انہوں نے بتایا کہ جدید ٹیکنالوجی سے ہم آہنگی نہ ہونے اور شرح خواندگی میں کمی کے سبب 80فیصد کسان جڑی بوٹیوں کی تلفی کیلئے اقدامات نہیں کرتے جس سے فصلوں کی پیداوار بری طرح متاثر ہوتی ہے ۔
انہوں نے بتایا کہ جڑی بوٹیوں کی وجہ سے کاشتکاروں کو 25سے 35فیصد تک نقصان کا سامنا کرنا پڑتا ہے ۔کاشتکاروں کو اس جانب خصوصی توجہ دینی چاہیے ۔ اگر کاشتکار کی معمولی غفلت کی وجہ سے جڑی بوٹیاں فصل میں زور پکڑ لیں تو یہ پیداوار کو 50فیصد تک کم کر سکتی ہیں۔ذرائع,اے پی پی
Published: Zarai Media Team

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More