کپاس کی بہتر نگہداشت کے لیے حکمت عملی

 کپاس کی بہتر نگہداشت
کپاس کی بہتر نگہداشت

اس وقت کپاس کی فصل پر پھل اور پھٹی زروں پر ہے فصل کی بہتر نگہداشت کے لیے ا س ہفتے ان سفارشات پر عمل کریں۔

* چنائی شروع کرنے کاموزوں ترین وقت صبح10:00بجے کے بعد شروع ہوتاہے۔ جس وقت فصل اورٹینڈوں پر سے رات کی شبنم خشک ہوجائے تاکہ کپاس بدرنگ نہ ہونے پائے اور نمی کی وجہ سے جننگ کے دوران مشکلات کاسامنا بھی نہ ہو۔ شام 4:00بجے چنائی بند کر دینی چاہیے۔

* چنائی ہمیشہ پودے کے نچلے حصے سے پکے ہوئے ٹینڈوں سے شروع کریں اور بتدریج اوپر کو چنائی کرتے جائیں تاکہ نیچے کے ٹینڈے اور پتے، چھڑیوں یا کسی دوسری چیز کے گرنے سے محفوظ رہیں۔چنائی کرتے وقت ٹینڈوں سے کپاس کو اچھی طرح نکال لینا چاہیے۔

* چنائی کے لیے استعمال ہونے والا کپڑا(جھولی) سوتی ہونا چاہیے اور چنی ہوئی پھٹی کو صاف اور خشک سوتی کپڑے پر رکھا جائے اور اس کے بعد صاف اونچی اور خشک جگہ پر اکٹھا کیا جائے تاکہ پھٹی آلودگی سے محفوظ رہ سکے۔بی ٹی اور غیر بی ٹی اقسام کی روئی کو علیحدہ رکھیں۔

* کپاس کی چنائی کا درمیانی وقفہ کم از کم 15سے 20دن رکھیں۔ جلدی چنائی کرنے سے ریشہ کچا رہ جاتاہے جس کی عالمی منڈی میں بہت کم قیمت ملتی ہے۔

* چنی ہوئی کپاس میں نمی،کچے ٹینڈے، ٹینڈوں کے ٹکڑے، رسیاں، سوتلی اور بال وغیرہ ہرگز شامل نہ ہونے دیں۔ ورنہ پُھٹی کا معیار گر جائے گا اور اس سے حاصل ہونے والے دھاگے اور کپڑے کا معیار بھی بہتر نہیں ہو گا۔

* چنائی کے بعد پھٹی کو ایک دودن دھوپ ضرور لگوائیں تاکہ نمی کومناسب سطح پر لایا جا سکے۔بادل ہونے کی صورت میں چنائی اس وقت تک نہ کی جائے جب تک کھلی ہوئی کپاس اچھی طرح خشک نہ ہو جائے۔

* کپاس کی فصل میں ہفتے میں دو بار پیسٹ سکاؤٹنگ کریں اگرکیڑوں کا حملہ نقصان کی معاشی حد تک ہو تو محکمہ زراعت کے مقامی عملہ کے مشورہ سے سپرے کریں۔

* نمی کی وجہ سے اس موسم میں کپاس پر سبز تیلااورلشکری سنڈی کا حملہ بڑھ جاتا ہے۔ اگر ان کیڑوں کا حملہ نقصان کی معاشی حد تک ہو تو محکمہ زراعت کے مقامی عملہ کے مشورہ سے سپرے کریں۔

* کپاس کے کھیتوں کو پانی دینے سے پہلے’’ محکمہ موسمیات کی پشین گوئی‘‘ ضرور دیکھ لیں۔

Copyright:  Zaraimedia.com

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More