( زرعی فیچر(جوار کی کاشت

جنوری 16 – 2013

نوید عصمت کاہلوں

جوار کی کاشت
جوار کی کاشت

جوارموسم گرما کا اہم چارہ ہے جو پانی کی کمی کو دوسرے چارہ جات کی نسبت بہتر طور پر برداشت کر سکتا ہے۔یہ فصل اناج اور چارے دونوں کیلئے کاشت کی جاتی ہے۔ اس میں خشک سالی برداشت کرنے کی صلاحیت دوسری فصلوں کے مقابلے میں زیادہ ہے۔ جوارکا غلہ مرغیوں کیلئے بہترین خوراک ہے۔

زمین کا انتخاب او رتیاری:۔ جوار کی کاشت کیلئے اچھے نکاس والی ہلکی میرا زمین کا انتخاب کریں۔ فصل کی کاشت کیلئے بارش کے بعد جب زمین پر وتر آ جائے تو 2 مرتبہ ہل چلا کر اور 2 دفعہ سہاگہ دے کر زمین تیار کر لیں، زمین کا نرم اور ہموار ہونا نہایت ضروری ہے۔ جوار کی فصل کو ہلکی میرا اور بھاری میرازمینوں پر بھی کاشت کیا جا سکتا ہے۔

کھادوں کا استعمال:۔ جوار کی فصل کیلئے عموماًدیسی یعنی گوبر کی گلی سڑی کھاد12-10 گڈ ے ( ٹرالیاں ) فی ایکڑ استعمال کریں۔ بصورت دیگر چارہ کی فصل کیلئے ایک بوری ڈی اے پی اور ایک بوری یوریا فی ایکڑ جبکہ غلہ کی فصل کیلئے ایک بوری ڈی اے پی ، آدھی بوری یوریا اور ایک بوری پوٹاشیم سلفیٹ فی ایکڑ زمین کی تیاری کے دوران کھیت میں ڈال دیں۔

ترقی دادہ اقسام:۔جوار کی ترقی دادہ اقسام پاک ایس ایس 2 ، جے ایس 263 ، جے ایس 2002 اور ہیگاری کاشت کریں ۔ یہ اقسام غلے اور چارے دونوں کیلئے یکساں مفید ہیں۔

وقت کاشت:۔ جوار کی کاشت 15 جولائی سے15 اگست تک کریں۔ چارہ کی فصل کیلئے جوار کو جون سے اگست تک کاشت کریں۔

شرح بیج :۔ جوار کی چارہ کیلئے کاشت کی جانے والی فصل کیلئے 30 تا 35 کلو گرام فی ایکڑ اور غلہ کیلئے 8 تا10 کلو گرام بیج فی ایکڑ استعمال کریں۔

Copyright:  Zaraimedia.com

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More