سیم و تھور میں اضافہ مستقبل کیلئے بڑا خطرہ ہے ،ڈاکٹر اقرار

15

سیم و تھور میں اضافہ
سیم و تھور میں اضافہ

جنوری 2013

پاکستان میں مجموعی قابل کاشت رقبے کا 26فیصد تھور زدہ ہے جس میں مسلسل اضافہ دیکھنے میں آ رہا ہے ۔ اگر یہی صورتحال برقرار رہی تو مستقبل میں بڑھتی ہوئی آبادی کیلئے غذائی ضروریات پوری کرنے میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑے گا۔ ان باتوں کا اظہار زرعی یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر اقرار احمد خاں نے سیمینار برائے تھور زدہ زمینوں کے جائزہ کیلئے زرعی فصلات کا ریموٹ سنسنگ نظام کے افتتاحی سیشن سے خطاب کے دوران کیا۔ ڈاکٹر وقار احمد نے کہا کہ جغرافیائی اطلاعاتی نظام (GIS)کی بدولت آسٹریلیا خوراک برآمد کرنیوالا ایک اہم ملک بن چکا ہے ۔ ڈاکٹر جاوید اختر اور ڈاکٹر محمد ارشد نے بھی خطاب کیا۔

Courtesy: Duniya

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More